شاعری: میاں وقارالاسلام، انتخاب: اَسماء چوہدری

//شاعری: میاں وقارالاسلام، انتخاب: اَسماء چوہدری

شاعری: میاں وقارالاسلام، انتخاب: اَسماء چوہدری

شاعری: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
مختصرتعارف
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نام: اَسماء چوہدری
پروفیشن: مجسٹریٹ، ایڈوکیٹ، ڈیجیٹل کانٹینٹ کریئٹر، کمیونیٹی ہیلتھ پروموٹر، کمیونٹی انٹرپریٹر، بڑاڈ کاسٹ جرنلیسٹ، کمیونٹی جرنلیسٹ
تعلیم: گریجویشن: ایل ایل بی، ماسٹر: ایل ایل ایم، یونیورسٹی: ہڈرزفیلڈ، کورس: کمیونیٹی جرنل ازم
ایوارڈزاینڈ اچیومنٹس:
1۔ بیسٹ ایونٹ آرگنائزر فار ایشن کمیونٹی سینٹر ناٹینگم
2۔ بیسٹ کمیونٹی سپیکر، کامیاب کمیونٹی پراجیکٹ، ناٹینگم
3۔ بہت سے سکول اور یونیورسٹی لیول ایوارڈز
4۔ بشمول بیسٹ پرفارمنس اینڈ بیسٹ پرزینٹیشن ایوارڈز
5۔ بیسٹ ریڈیو پریزینٹر کمیونٹی ایوارڈ
6۔ سرٹیفکیٹ آف لیٹریری کنٹریبیوشنز (ادب سرائے ، وقارِ پاکستان)
7۔ سرٹیفکیٹ آف پروفیشنل ایکسیلینسی (مارول سسٹم)
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
مختصرتعارف
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نام: میاں وقارالاسلام، شاعر، ادیب، کارپوریٹ ٹرینر، بزنس کنسلٹینٹ
پرنسپل کنسلٹینٹ، مارول سسٹم، فاؤنڈر، وقارِ پاکستان لیٹریری ریسرچ فورم
ڈائیریکٹر آپریشنز، نیازی گروپ آف کمپنیز، سی ای او، سوشو آن اردو سوشل نیٹ ورک
ایڈوائزر: ادب سرائے انٹرنیشنل، کنسلٹینٹ: ایکو کئیر کنسلٹینسی سرویسز
تعلیم: بی کام، ایم بی اے، سرٹیفکیشنز : مائیکرو سافٹ، سیسکو اینڈ کارویٹ سسٹم
لائف ٹائم ایچیومنٹ ایوارڈز سال 2016 اینڈ 2017
نیازی گروپ آف کمپنییز، ادب سرائے انٹرنیشنل
بزنس ایکسی لینس ایوارڈز سال 2018 اینڈ 2019
ایکو کئیر کنسلٹینسی سرویسز (پاکستان)، ٹی ایس وائین ( برطانیہ)
ایجوکیشنل اینڈ لیٹریری ایوارڈز سال 2019 اینڈ 2020
سائی سینس (سعودی عرب)، ہیرا فاؤنڈشن (امریکہ)
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اے دوست مجھ میں کوئی فرشتہ نہ کر تلاش
انساں کی دسترس میں فرشتہ نہیں آتا
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
رب سے پیار کیا ہے جس نے
اس نے سب سے محبت کی ہے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اک اندھی محبت میں مارے گئے ہیں
ہمیں جنتوں کی بشارت سنا دو
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
ہم نے بھی ٹوٹ کر محبت کی
پر ہمیں راس وہ نہیں آئی
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
گونج سناٹے کی ہے کانوں میں
تیری آواز جو نہیں آئی
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
رہے ہیں تم سے ہی وابستہ لمحے خوشیوں کے
وہ عید ، عید نہیں تو جو آ نہیں سکتا
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
سُنا ہے آج کی رات چاند نظر نہیں آیا
شاید مجھ سے رُوٹھا تھا جو اِدھر نہیں آیا
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
شب بھر مہماں رہتی ہے دن بھر یہ نظر آتی ہے
شام ہوتے ہی تیری صورت چشم تر میں اتر آتی ہے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
میری آنکھیں تو بھیگ جاتی ہیں
پھر سے تیرے حسیں خیال کے بعد
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تم پیار کو سمجھو بے چینی
اس بے چینی میں راحت ہے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
حق میں تیرے جہاں وکالت نہیں جاتی
ہم سے وہاں لگائی عدالت نہیں جاتی
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اے کاش ہجر موسم تم بھی تو کبھی دیکھو
ذرا ہم بھی جان جائیں کتنے تم افلاطوں ہو
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جب عشق کی حدت سے یہ جھلسا تھا مرا دل
ہونٹوں کی شرارت نے مجھے آگ لگا دی
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
چند روز اپنی تم سے جو قربت نہیں رہی
تم سمجھے یہ کہ مجھ کو محبت نہیں رہی
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
آپ کی گفتگو نشیلی ہے
آپ بھی کیا شراب بیچتے ہیں؟
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
شاعری: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تراشے
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: دن کا آغاز
دن کا آغاز
تیری دید سے
ہو سکتا ہے
گر یہ ہو سکتا ہے
کچھ بھی ہو سکتا ہے

شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم:صبحِ مست
‏صبحِ مست
تیری انگڑائیوں سے
طلوع ہوتی ہے
دن نکلتا ہے
تیرے ہونٹوں کے
مسکرانے سے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: میں نے کہا
میں نے کہا! صورت
اُجلے سویروں جیسی
اب جس کی ہے
وہ تصور کر لے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: مستیء جاں
مستی ء جاں کو
اب اور کیا چاہیے
تیرے ہاتھوں کی چائے
تیرے ہونٹوں کی شراب
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: مشکل تھی یہ زندگی
بہت گہرا سمندر تھا
وہ جس کا ساحل
تمہاری پلکیں تھیں
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: تمہیں دے دوں
تمہیں دے دوں
میں اپنی آنکھیں
اور تم میری
وفا دیکھ سکو
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: وہ آپ نظم
وہ خود غزل
وہ آپ نظم
ہے شاعری کا
وزن اس میں
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: ‏کوئی نظم سناؤ ہمیں
‏کوئی نظم سناؤ ہمیں
ہمارے زخم تازہ ہیں
کوئی غزل سناؤ ہمیں
پرانا گھاؤ سل جائے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: میری ایک ہی محبت ہے
جو میرے ساتھ رہتی ہے
جو گماں میں رہ گئی تھی
اسے داستاں تو کہتے ہیں
اسے محبت تو نہیں کہتے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: تمہاری یادوں کے سہارے
تمہاری یادوں کے پت جھڑ
تمہاری یادوں کی رم جھم
تمہاری یادوں کی بہاریں
تمہاری یادوں کے دھند لکے
ہم نے اک زندگی جی ہے
تمہاری یادوں کے سہارے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: وہی دسمبر کی ہیں سخت سردیاں
تمہارے سوا نہ کچھ دکھائی دے
تمہارے سوا نہ کچھ سنائی دے
وہی صبح تک کے ہیں رت جگے
وہی دن چڑھے کے ہیں دھند لکے
وہی دسمبر کی ہیں سخت سردیاں
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: دل آج بھی مقروض ہے
ریت کے گھروندوں کا
ٹوٹے ہوئے کھلونوں کا
کاغذ کے بیڑوں کا
بارش کے ریلوں کا
دل آج بھی مقروض ہے
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: چشمِ آوارہ
یونہی چلتے پھرتے
کسی دن شام کے وقت
سوچ کی وادیوں میں کہیں
مجھے دیکھ کے چونکے گی
پچھلے پہر میں
ڈُوب جائے گی
تو کہاں جائے گی
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: محور تم ہو
چنچل سی کہکشائیں
جب پھیلاتی ہیں
فلک پہ عروسی آنچل
گھٹا کے چلمن سے جھانکتے
اَنگنت ستاروں کا
محور تم ہو
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظم: تیرے نام کی
صبح ہوتی ہے تو
“کرنیں”
تیرے نام کی
مجھے جگاتی ہیں
دن ڈھلتا ہے تو
“سائے”
تیرے نام کے
پھیل جاتے ہیں
شاعر: میاں وقارالاسلام
انتخاب: اَسماء چوہدری
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
PERSONAL: WWW.ASMAACHAUDHRY.CO.UK
PROFESSIONAL: WWW.ASMAACHAUDHRY.UK
YOUTUBE: WWW.YOUTUBE.COM/C/ASMAADIGITALSTUDIO
FACEBOOK: WWW.FACEBOOK.COM/ASMAACHAUDHRY.UK
INSTAGRAM: WWW.INSTAGRAM.COM/ASMAACHAUDHRY
TWITTER: WWW.TWITTER.COM/ASMAACHAUDHRY
ASIAN RADIO LIVE:
WWW.ASIANRADIOLIVE.COM/ASMA.HTM
LITERARY: WWW.WAQAREPAKISTAN.COM
TIKTOK: TIKTOK.COM/@ASMAACHAUDHRY
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
PERSONAL: WWW.MIANWAQAR.COM
PROFESSIONAL: WWW.MARVELSYSTEM.COM
LITERARY: WWW.WAQAREPAKISTAN.COM
NIAZI GROUP: WWW.NIAZIGROUP.COM
UNIQUE SCHOOL: WWW.UNIQUESCHOOL.EDU.PK
ECOCARE: WWW.ECOCARE.PK
DIETCARE: WWW.DIETCARE.PK
ADAB SARAAE: WWW.ADABSARAAE.COM
SOCIOON: WWW.SOCIOON.COM
SEISENSE INC: WWW.SEISENSE.COM
ACME GROUP: WWW.ACMEMULTAN.COM
TALEEMIBAITHAK: WWW.TALEEMIBAITHAK.ORG

By |2020-08-19T11:40:23+00:00August 19th, 2020|Literary News|0 Comments

Leave A Comment